Warning: mysqli_query(): (HY000/1194): Table 'wpci_stylo_views' is marked as crashed and should be repaired in /home/dailyrapd/public_html/wp-includes/wp-db.php on line 2056

Warning: mysqli_query(): (HY000/1194): Table 'wpci_stylo_views' is marked as crashed and should be repaired in /home/dailyrapd/public_html/wp-includes/wp-db.php on line 2056

دیامربھاشا ڈیم منصوبے پر اہم پیش رفت

اسلام آباد :تھور اور ہربن قبائل کے درمیان حدود کا دیرینہ تنازعہ حل کر لیا گیا ہے جو دیامربھاشا ڈیم پراجیکٹ کی تعمیر کیلئے انتہائی اہم پیش رفت ہے، دونوں قبائل کے درمیان مذکورہ تنازعہ کے حل کی وجہ سے گلگت بلتستان اور خیبر پختونخواکے مابین حد بندی کا مسئلہ حل کرنے میں بھی مدد ملے گی،منصوبہ سے ہر سال 18 ارب یونٹ کم لاگت اور ماحول دوست بجلی مہیا ہو گی اورتربیلا ڈیم کی عمر میں 35سال اضافہ ہوگا۔

اعلامیہ واپڈا کے مطابق گرینڈ جرگہ نے تھور اور ہربن قبائل کے درمیان حدود کا دیرینہ مسئلہ حل کر لیا ، اعلامیہ واپڈا کے مطابق قبائل کے درمیان تنازعہ کے حل سے گلگت بلتستان اور خیبر پختونخوا کے درمیان حدودکا مسئلہ حل کرنے کی راہ ہموار ہوگی،تنازعہ کے حل کا اعلان 26 رکنی گرینڈ جرگہ نے دیامربھاشا ڈیم پراجیکٹ سائٹ پر ایک تقریب کے دوران کیا ،چیئرمین واپڈا لیفٹیننٹ جنرل مزمل حسین (ریٹائرڈ) اور کمانڈر ایف سی این اے میجر جنرل جواد احمد بھی تقریب میں شریک ہوئے

گرینڈ جرگہ کے فیصلوں کی روشنی میں چیئرمین واپڈا اور گرینڈ جرگہ کے ارکان نے تھور اور ہربن قبائل کے متاثرین میں 40 کروڑ روپے کے چیک تقسیم کئے،یہ رقم دونوں قبائل کے درمیان 2014ء کے تصادم میں جاں بحق ہونے والے افراد اوراملاک کو پہنچنے والے نقصان کی تلافی کے طورپر دی گئی ہے۔

اس حوالے سے وزیراعظم عمران خان نے بھی سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر ٹویٹ کرتے ہوئے کہا ہے کہ دیامربھاشا ڈیم پر تاریخی پیشرفت ، خوشخبری ہے کہ دیامر اور بالائی کوہستان کےعمائدین پرمشتمل گرینڈ جرگے نے تھور اور ہر بن قبیلے کے مابین دس سالہ پرانا تنازعہ نمٹا دیاہے۔اس سے ڈیم کی باآسانی اور بروقت تکمیل کیساتھ خیبر پختونخوا اور گلگت بلتستان کے مابین سرحدی تنازعے کے حل کی راہ ہموارہوگی۔