وزیراعلیٰ پنجاب کی ٹیم پر کچے کے علاقہ میں حملہ‘ 3 پولیس اہلکار شہید‘ 6 زخمی

رحیم یارخان: نگران وزیراعلیٰ پنجاب کی ٹیم پر کچے کے علاقہ میں ہونے والے حملے میں 3 پولیس اہلکار شہید اور 6 زخمی ہوگئے۔ تفصیلات کے مطابق نگران وزیر اعلیٰ پنجاب محسن نقوی نے بتایا ہے کہ رحیم یار خان کے کچے کے علاقے میں ہماری ٹیم پر حملہ ہوا جس میں 3 پولیس اہلکار شہید اور 6 زخمی ہوئے، جس علاقے میں حملہ ہوا اس کے چاروں طرف سندھ کا علاقہ ہے، 70 سے 80 ڈاکوؤں نے سندھ کے اندر سے پنجاب کی حدود میں داخل ہوکر حملہ کیا، پولیس کے 19 جوانوں نے بہادری سے کئی گھنٹے مقابلے کے بعد ڈاکوؤں کو بھاگنے پر مجبور کردیا۔
معلوم ہوا ہے کہ وزیر اعلی محسن نقوی کچے میں ڈاکوں کی فائرنگ سے زخمی اہلکاروں کا حوصلہ بڑھانے کے لئے شیخ زید ہسپتال رحیم یار خان پہنچے جہاں وزیر اعلی محسن نقوی نے زخمی کانسٹیبل نوید اختر، جمیل احمد، محمد عمران، عبد الرزاق، آصف علی او رمحمد سرور کی عیادت کی، وزیراعلی نے ڈاکوں کی فائرنگ سے زخمی ہونے والے کسان کی بھی عیادت کی، وزیر اعلی محسن نقوی ہر زخمی کے پاس گئے اور بات چیت کی بتایا گیا ہے کہ وزیر اعلی محسن نقوی نے زخمی پولیس اہلکاروں سے واقعہ کی تفصیلات بھی معلوم کی۔
وزیر اعلی نے زخمی پولیس اہلکاروں کا حوصلہ بڑھایا، وزیر اعلی نے زخمی اہلکارو ں کے بہترین علاج معالجہ کی ہدایت کی اور کہا کہ کچے میں ڈاکوں سے مقابلہ کرنے والے پولیس افسر اوراہلکار حقیقی ہیرو ہیں، ڈاکوں سے مقابلہ کرتے ہوئے شہید اور زخمی ہونے والے پولیس اہلکاروں کی قربانیوں کو یاد رکھا جائے گا۔ اس موقع پر وزرا، ایڈیشنل چیف سیکرٹری اور انسپکٹر جنرل پولیس نے بھی زخمی پولیس اہلکارو ں کی عیادت کی، صوبائی وزراء عامر میر، ابراہیم مراد، ایڈیشنل چیف سیکرٹری، انسپکٹر جنرل پولیس او ردیگر افسران بھی موجود تھے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں