عوام کیلئے عید سے پہلے مہنگائی ایک اور “تحفہ”

اسلام آباد: بجلی مزید مہنگی کرنے کا اعلان۔ تفصیلات کے مطابق عوام کیلئے عید سے پہلے مہنگائی ایک اور “تحفہ”، پٹرول کے بعد بجلی بھی مزید مہنگی کر دی گئی۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق نیپرا نے دوسری سہ ماہی کیلئے بجلی مہنگی کرنے کی منظوری دے دی گئی ہے۔ نیپرا نے ملک بھر کے بجلی صارفین کیلئے بجلی کی فی یونٹ قیمت میں 2 روپے 75 پیسے اضافے کی منظوری دی ہے، جس سے صارفین پر 85 ارب روپے سے زائد کا بوجھ پڑے گا۔
نیپرا اعلامیہ کے مطابق بجلی صارفین سے سہ ماہی ایڈجسٹمنٹ کے پیسے اپریل، مئی اور جون کے بلوں میں وصول کیے جائیں گے۔ نیپرا نے بجلی مہنگی کرنے کا نوٹیفیکیشن بھی جاری کر دیا ہے۔ مزید برآں نیوز ایجنسی کے مطابق بجلی ایک ماہ کے لیے 5 روپے فی یونٹ مہنگی کرنے کی ابتدائی منظوری لے لی گئی، اضافہ فروری کی ماہانہ فیول ایڈجسٹمنٹ کی مد میں مانگا گیا۔
نیپرا اتھارٹی نے ایف سی اے کی مد میں درخواست پر سماعت مکمل کر لی، قیمتوں میں اضافے سے متعلق حتمی فیصلہ بعد میں جاری کرے گی۔دوران سماعت ممبر نیپرا نے کہا کہ بجلی کی طلب کم ہونے سے صارفین پر بوجھ پڑ رہا، طلب میں اضافے کے لیے کام کیوں نہیں کر رہے ہیں، مقامی کوئلے سے بجلی کی پیداوار 36فیصد کم ہوئی ہے اور مقامی کوئلہ استعمال نہ کرنے سے قمیت بڑھی، آپ جب مہنگی ایل این جی پر پاور پلانٹس چلائیں گے تو بجلی مہنگی ہوگی۔
ممبر نیبرا رفیق شیخ نے کہا کہ ذرمبادلہ کا الگ نقصان اور صارفین کا الگ نقصان ہو رہا ہے، مہنگے پاور پلانٹس چلا کر کیپسٹی چارجز اور فیول چارجز بڑھائے گئے۔ممبر بلوچستان نے کہا کہ سہ ماہی ایڈجسمنٹ کی میں 2 روپے 63 پیسے کا بوجھ پڑے گا اور اس مہینے 7روپے 63 پیسے کا بوجھ پڑے گا۔ نیپرا اتھارٹی کے مطابق کیپسٹی میں کمی کے لیے بینچ مارکس طے کرنا ہوں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں