صارفین کو کم بجلی استعمال کرنے والے پنکھے دینے کا منصوبہ تیار

اسلام آباد: قومی تحفظ اتھارٹی نے صارفین کو کم بجلی استعمال کرنے والے پنکھے دینے کا منصوبہ تیار کرلیا،وزارت خزانہ میں جامع پلان جمع کروا دیا،سٹیٹ بینک کی رسک گارنٹی پر بینکوں نے فنانسنگ پرآمادگی بھی ظاہر کر دی،منصوبے کے مطابق پہلے مرحلے میں 9 کروڑ کے قریب پرانے پنکھوں کی جگہ نئے پنکھے لگانے کا منصوبہ ہے۔
بینک پنکھوں کی تبدیلی کیلئے 1500ارب روپے کا قرض دیں گے جس کے تحت پرانے پنکھوں کی جگہ صارفین کو کم بجلی استعمال کرنے والے پنکھے دئیے جائیں گے۔ذرائع پاور ڈویژن کے مطابق بینکوں کو رقم بجلی بلز میں ماہانہ قسط کی صورت میں واپس کی جائے گی۔سکیم کے تحت پہلے مرحلے میں 8کروڑ 80 لاکھ پرانے پنکھے تبدیل ہوں گے۔ ملک میں اس وقت 14کروڑ 70لاکھ غیر معیاری پنکھے استعمال ہو رہے ہیں۔
یہ بھی بتایاگیا ہے کہ پرانے غیر معیاری پنکھے تبدیل کرنے سے پانچ ہزار میگاواٹ بجلی کی بچت ہوگی۔صارفین کے گھروں پر لگے غیر معیاری پنکھے کی قیمت 1500 روپے مقرر ہوگی۔واضح رہے کہ چند روز قبل وزیر توانائی سندھ ناصر حسین شاہ نے بجلی کے 100 یونٹ تک استعمال کرنے والے صارفین کو خوشخبری سناتے ہوئے کہا تھا کہ 100 یونٹ تک کے صارفین کو سولر پارک اور منی گرڈ اسٹیشن سے صارفین کو مفت بجلی دی جائیگی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں